‘شَرَح’

کسی نظم میں نہیں سمٹتے
کسی شعر میں کامل بیان نہیں ہوتے

میری جان

تُم دنیاداری کا کوئی کلیہ 

دین داری کی کوئی شرط نہیں ہو

تُم عشق کی رمز 

ہوس کا وبال بھی نہیں ہو

تمہیں ابھی آشکار ہونا ہے

میری فنا کے اُس پار 

جہاں مجھے 

تمہارے حق میں ادا ہونا ہے

Advertisements

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s